پاکستان

ادویات فروخت کرنے والے مافیاز کو لگام ڈال دی گئی، ڈاکٹر حضرات کی بھی سہولت ختم کر دی، سب ہاتھ ملتے رہ گئے، حیران کن خبر سامنے آنے کے بعد سب چونک گئے

ادویہ مافیا نے حکمران طبقہ کو اپنے جادو میں اس قدر جکڑا ہوا ہے کہ آج تک کمیشن کی رپورٹ کے مندرجات پر عمل درآمد نہیں ہو سکا

ادویات فروخت کرنے والے مافیاز کو لگام ڈال دی گئی، ڈاکٹر حضرات کی بھی سہولت ختم کر دی، سب ہاتھ ملتے رہ گئے، حیران کن خبر سامنے آنے کے بعد سب چونک گئے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق ادویہ مافیا نے حکمران طبقہ کو اپنے جادو میں اس قدر جکڑا ہوا ہے کہ آج تک کمیشن کی رپورٹ کے مندرجات پر عمل درآمد نہیں ہو سکا۔ ڈاکٹرز حضرات نے بھی اپنے تعلق اور لین دین والی ادویہ ساز کمپنیوں کی دوائیاں لکھ لکھ کر غریب عوام کی جیبوں کو خالی کرنے کی قسم اٹھا رکھی ہے۔مگر اب حکومت جاگ اٹھی ہے اور ڈریپ نے ڈاکٹرز حضرات کو دوائی کا نام لکھنے کی بجائے فارمولا لکھنے کی تلقین کر دی ہے۔

ڈرگ ریگولیٹری اتھارٹی آف پاکستان (ڈریپ)نے صوبوں کے محکمہ صحت کو ہدایت کی ہے کہ ڈاکٹر اس بات کو یقینی بنائیں کہ وہ ادویات کے برانڈ کے ناموں کے بجائے کیمیائی نام تجویز کریں۔ رپورٹ کے مطابق ڈریپ کے ایک خط میں ملک بھر کے محکمہ صحت کو مخاطب کرتے ہوئے یہ کہا گیا ہے کہ متعدد شکایات موصول ہوئی ہیں جس میں شہریوں نے سرکاری اور نجی شعبے میں ڈاکٹروں کی جانب سے کمپنی سے اثر انداز ہوکر ادویات کے برانڈ پر مبنی نسخوں پر تشویش کا اظہار کیا ہے۔انہوں نے کہا کہ ‘اس طرز عمل سے ملک کے معاشی بوجھ میں اضافہ ہوتا ہے اور مہنگے برانڈز کی وجہ سے مریضوں پر مالی بوجھ بھی پڑتا ہے’۔

متعلقہ خبریں

Back to top button

Adblock Detected

We Noticed You are using Ad blocker :( Please Support us By Disabling Ad blocker for this Domain. We don't show any popups or poor Ads. because we hate them too.