پاکستان

72 گھنٹے اہم،شہبازشریف حکومت گراسکتے ہیں

رصحافی عارف حمید بھٹی کا کہنا ہے کہ سابق وزیراعلی پنجاب شہبازشریف عمران خان کی پنجاب حکومت 72 گھنٹوں میں گرا سکتے ہیں

سینئرصحافی عارف حمید بھٹی کا کہنا ہے کہ سابق وزیراعلی پنجاب شہبازشریف عمران خان کی پنجاب حکومت 72 گھنٹوں میں گرا سکتے ہیں۔  انہوں نے کہا کہ جمعہ کے دن شہبازشریف سے کچھ لوگوں کی ملاقات ہوئی ہے۔ شہبازشریف کو 72 گھنٹےدے دیں توپنجاب کی حکومت جا سکتی ہے۔ شہبازشریف جہانگیرترین سےمل کرپنجاب حکومت گراسکتے ہیں۔ یہ اطلاع پاکستان کے اہم ترین اداروں کو بھی پہنچ چکی ہے۔ سینئرصحافی اورتجزیہ کارطاہرملک کا کہنا ہےکہ بجٹ کےقریب آتےہی اتحادی جماعتیں شروع ہوجاتےہیں کہ ہمیں یہ چاہیے۔انہوں نےمزید کہا کہ پاکستان پیپلزپارٹی کےاہم حلقےکہہ رہےہیں کہ اس وقت اسٹیبلشمنٹ بالکل نیوٹرل ہے۔ پیپلزپارٹی کی یہ سوچ ہےکہ جہانگیر ترین کےلوگ،ق لیگ اورایم کیوایم کوساتھ ملا کروہ اس پوزیشن میں آجائیں گےکہ عید کےبعد تحریک عدم اعتماد چلائی جائے۔

دوسری طرف پاکستان تحریک انصاف کےرہنما جہانگیرترین نےکہا ہےکہ وزیراعظم نےمیرے دوستوں کویقین دہانی کرائی ہےکہ وہ خود ان معاملات کودیکھیں گے،مسلم لیگ ن اور پیپلزپارٹی سےکوئی رابطہ نہیں ہوا ،عدالت میں پیشی کےموقع پرمیڈیا نمائندگان سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ وزیراعظم سےمیرے دوستوں کی ملاقات ہوئی تھی جوبہت اچھی رہی ہے،ہمارے لوگوں نےوزیراعظم سےکھل کر باتیں کیں اوراپنےتحفظات سےانہیں آگاہ کیا،جس پروزیراعظم نےیقین دہانی کرائی ہےکہ وہ خود ان معاملات کودیکھیں گےاورکہا ہے کہ انصاف ہونا چاہیے،لہٰذا امید ہےعلی ظفراچھی طرح دیکھ کروزیراعظم کوبتائیں گے،میرا مسلم لیگ ن اورپیپلزپارٹی سےکوئی رابطہ نہیں ہوا ، مجھےصرف پی ٹی آئی سےہی بہت سےلوگوں کی حمایت حاصل ہے۔

متعلقہ خبریں

Back to top button

Adblock Detected

We Noticed You are using Ad blocker :( Please Support us By Disabling Ad blocker for this Domain. We don't show any popups or poor Ads. because we hate them too.