پاکستانفیچرڈ پوسٹ

حکومت کا بڑا یوٹرن، جہانگیر ترین اور علی ترین کو بڑا ریلیف، عبوری ضمانت مکمل ہونے کے باوجود گرفتاری عمل میں کیوں نہ آئی، بڑی خبر آگئی

ایف آئی اے کے تفتیشی افسر نے جہانگیر ترین اور علی ترین کیس میں عدالت کو آگاہ کیا ہے کہ اس مرحلے پر گرفتاری کی ضرورت نہیں ہے

حکومت کا بڑا یوٹرن، جہانگیر ترین اور علی ترین کو بڑا ریلیف، عبوری ضمانت مکمل ہونے کے باوجود گرفتاری عمل میں کیوں نہ آئی، بڑی خبر آگئی ہے۔

تفصیلات کے مطابق ایف آئی اے کے تفتیشی افسر نے جہانگیر ترین اور علی ترین کیس میں عدالت کو آگاہ کیا ہے کہ اس مرحلے پر گرفتاری کی ضرورت نہیں ہے۔ جہانگیر ترین اور علی ترین عبوری ضمانت مکمل ہونے پر سیشن اور بینکنگ کورٹ میں پیش ہوئے۔ سیشن کورٹ میں دورانِ سماعت ایف آئی اے کے تفتیشی افسر نے کہا کہ ہم ریکارڈ کا جائزہ لے رہے ہیں، اس مرحلے پرگرفتاری درکار نہیں لہذا ملزم کی گرفتاری کی ضرورت نہیں ہے۔

سماعت کے دوران جہانگیر ترین کے وکیل نے دلائل میں کہا کہ اکاؤنٹ میں پیسے کہاں سے اورکیسے آئے سب تفصیل ہے، شیئر ہولڈر کی اجازت سے کمپنی کام کرتی ہے، یہ کیس ایف آئی اے کے دائرہ اختیار میں نہیں تھا بلکہ کیس ایس ای سی پی کا تھا۔ اس موقع پر ایف آئی اے کے تفتیشی افسر کا کہنا تھا کہ ہم بنیادی حقوق پر یقین رکھتے ہیں، جہانگیر ترین اور علی ترین کی اس کیس میں گرفتاری کی ضرورت نہیں، اگر کوئی کارروائی کرنا ہو گی تو مطلع کر دیں گے۔ دورانِ سماعت جہانگیر ترین کے وکیل نے کہا کہ ہم درخواست ضمانت واپس لینا چاہتے ہیں جس کے بعد وکیل نے جہانگیر اور علی ترین کی بینکنگ کورٹ کیس میں درخواست ضمانت واپس لے لی۔

متعلقہ خبریں

Back to top button

Adblock Detected

We Noticed You are using Ad blocker :( Please Support us By Disabling Ad blocker for this Domain. We don't show any popups or poor Ads.