پاکستانفیچرڈ پوسٹ

تین بہنوں کی آنکھوں کا تارا اور لاڈلہ بھائی جس نے اپنے دوست کی جان بچانے کے لئے …………؟ المناک واقعہ رپورٹ کر دیا گیا

دانش عالم اپنے ایک ساتھی کی جان بچانے کی کوشش میں منفی پندرہ ڈگری کے یخ بستہ پانی کے ہاتھوں زندگی کی بازی ہار گئے

تین بہنوں کی آنکھوں کا تارا اور لاڈلہ بھائی جس نے اپنے دوست کی جان بچانے کے لئے …………؟ المناک واقعہ رپورٹ کر دیا گیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق عالم خان اپنے بیٹے دانش عالم کو بہت یاد کرتے ہیں لیکن ان کی آواز میں غم نہیں۔ دانش یکم جولائی کی صبح اپنی کمپنی کے ساتھیوں کے ہمراہ اسلام آباد سے گلگت بلتستان کے علاقے استور کے راستے میں تھے۔ وادی کاغان سے گزرتے ہوئے وہ کچھ دیر کے لیے لولوسر جھیل پر رکے، جہاں پر کئی عینی شاہدین کے مطابق وہ اپنے ایک ساتھی کی جان بچانے کی کوشش میں منفی پندرہ ڈگری کے یخ بستہ پانی کے ہاتھوں زندگی کی بازی ہار گئے۔ عالم خان کے مطابق جب انھیں پتا چلا کہ دانش اپنے ساتھی کو بچاتے ہوئے ہلاک ہو گیا ہے تو ان کے مطابق انھیں افسوس نہیں ہوا۔ اگر وہ کسی حادثے یا طبعی موت مر جاتا تو شاید مجھے دکھ اور افسوس ہوتا۔ اب اس کی بہت یاد آتی ہے مگر دکھ نہیں ہوتا۔

دانش عالم سافٹ ویئر کی ملٹی نیشنل کمپنی بٹ سول آباد میں بحثیت ویب انجینیئر خدمات انجام دے رہے تھے۔ ان کی کمپنی نے ہر سال کی طرح اس سال بھی گلگت بلتستان کے ایک تفریحی دورے کا اہتمام کیا تھا۔ بٹ سول کے سی ای او محمد جاوید نے بی بی سی کو بتایا کہ جب وہ لوگ جھیل پر پہنچے تو جھیل کے کنارے پانی میں ایک خالی بوتل پڑی ہوئی تھی۔ مجھے یہ بہت برا لگا اور میں نے کہا کہ دیکھو لوگ کس طرح ہمارے قدرتی خزانوں کو تباہ کر رہے ہیں، اس صاف و شفاف پانی میں یہ بوتل پھینکنے کی کیا ضرورت تھی؟

دانش عالم نے ان کی بات سے اتفاق کرتے ہوئے کہ ہمارے لوگوں کو احساس نہیں ہے اور قمیض اتار کی کنارے کی قریب جا کر جہاں پانی زیادہ گہرا نہیں تھا، خالی بوتل نکالی اور چند سیکنڈ پانی میں رہنے کے بعد باہر آگئے۔ محمد جاوید کا کہنا تھا کہ ابھی دانش پانی سے باہر ہی نکلے تھے کہ ان کے ایک ساتھی جو غالبا پتھر پر بیٹھے تھے، پھسل کر کنارے سے سات آٹھ فٹ دور گہرے پانی میں جا گرے۔ ایسے معلوم ہوتا تھا کہ پہلے چند سیکنڈ میں ہی وہ یخ بستہ پانی سے اپنے ہوش و حواس کھو بیٹھے تھے۔ دانش عالم کے ساتھی اور دوست محمد عاصم بتاتے ہیں ابھی میں صورتحال کو سمجھ ہی رہا تھا کہ دانش نے جھیل میں چھلانگ لگا دی اور پانی میں موجود شخص کو کمر سے پکڑ کر کنارے کی طرف دکھیلنے لگے۔

متعلقہ خبریں

Back to top button

Adblock Detected

We Noticed You are using Ad blocker :( Please Support us By Disabling Ad blocker for this Domain. We don't show any popups or poor Ads.