پاکستان

جیسے پیپلز پارٹی کی مرکزی رہنماء طلب کیے جانے پر نیب کے دفتر میں پہنچیں تو ان کے ساتھ کیا سلوک کیا گیا؟ شرمناک حقیقت سامنے آگئی

شہلا رضا کو نیب میں پیشی پر25 سوالوں پر مشتمل پرچہ تھمادیا گیا اور تمام سوالوں کے جواب لازمی 10 دن میں جمع کرانے کی ہدایت کی

جیسے پیپلز پارٹی کی مرکزی رہنماء طلب کیے جانے پر نیب کے دفتر میں پہنچیں تو ان کے ساتھ کیا سلوک کیا گیا؟ شرمناک حقیقت سامنے آگئی ہے۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان پیپلزپارٹی کی رہنما و سندھ کی وزیر برائے وومن ڈویلپمنٹ سیدہ شہلا رضا قومی احتساب بیورو (نیب)کراچی کے دفتر میں پیش ہوئیں۔ نیب کراچی نے شہلا رضا کو بطور قومی ادارہ برائے امراض قلب (این آئی سی وی ڈی)بورڈ ممبر طلب کیا تھا جہاں وہ نیب حکام کے سامنے پیش ہوئیں۔ نیب ذرائع کے مطابق شہلا رضا سال 2015 سے 2017 تک گورننگ باڈی کی ممبر رہیں ہیں۔شہلا رضا کو نیب میں پیشی پر 25 سوالوں پر مشتمل پرچہ تھمادیا گیا اور تمام سوالوں کے جواب لازمی 10 دن میں جمع کرانے کی ہدایت کی۔

متعلقہ خبریں

Back to top button

Adblock Detected

We Noticed You are using Ad blocker :( Please Support us By Disabling Ad blocker for this Domain. We don't show any popups or poor Ads.