پاکستانفیچرڈ پوسٹ

سپرنٹنڈنٹ بے شرمی کی انتہاء کر دی‘ علامہ اقبال اوپن یونیورسٹی کے انٹر میڈیٹ امتحانات میں حجاب کی بے حرمتی، مرد طلباء کی موجودگی میں طالبات ننگے سر امتحانات دینے پر مجبور

لاہورمیں خواتین کے لئے بنائے گئے متعدد سینٹرز میں سپرنٹنڈنٹس کی جانب سے خواتین طالبات کو عبایا اتار کر پیپر میں شریک ہونے کا حکم دیا گیا

سپرنٹنڈنٹ بے شرمی کی انتہاء کر دی‘ علامہ اقبال اوپن یونیورسٹی کے انٹر میڈیٹ امتحانات میں حجاب کی بے حرمتی، مرد طلباء کی موجودگی میں طالبات ننگے سر امتحانات دینے پر مجبورہو گئیں

لاہور (کھوج نیوز)علامہ اقبال اوپن یونیورسٹی کے انٹر میڈیٹ امتحانات میں حجاب کی بے حرمتی، طالبات ننگے سر امتحانات دینے پر مجبور، صوبائی دارلحکومت کے متعدد امتحانی مراکز میں امتحان دینے آئی طالبات کے عبائے اتار دیئے گئے، پی اینڈ ٹی گورنمنٹ ماڈل گرلز ہائی سکول کے امتحانی مرکز میں مرد طلبا کی موجودگی میں سپرنٹنڈنٹ نے خواتین طالبات کے زبردستی عبائے اتروائے، متعدد طالبات بغیر دوپٹے کے امتحان دینے پر مجبور ہوئیں۔

بتایا گیا ہے کہ علامہ اقبال اوپن یونیورسٹی کے زیر سایہ انٹرمیڈیٹ کا امتحان منعقد کیا جا رہا ہے۔ گزشتہ روز صوبائی دارلحکومت میں ہزاروں طلبا و طالبات نے اس میں حصہ لیا۔ ذرائع کے مطابق لاہورمیں خواتین کے لئے بنائے گئے متعدد سینٹرز میں سپرنٹنڈنٹس کی جانب سے خواتین طالبات کو عبایا اتار کر پیپر میں شریک ہونے کا حکم دیا گیا۔عبائے اتار کر مردوں کے سامنے طالبات کی جسمانی چیکنگ کی گئی۔ ذرائع کے مطابق گزشتہ روز پی اینڈ ٹی گورنمنٹ ماڈل گرلز ہائی سکول ملتان روڈ کے امتحانی مرکز میں 80سے زائد طالبات امتحان دینے کے لئے آئیں تھیں جہاں پر دو مرد طالب علم بھی پیپر دینے پہنچے ہوئے تھے۔ خواتین کے لئے مختص کیے جانے والے سینٹر میں مرد طلبا کی موجودگی میں سپرنٹنڈنٹ نے خواتین طالبات کے زبردستی عبائے اتروائے۔مردطلبا کی موجودگی میں خواتین نے عبائے اتارنے سے انکار کر دیا جس پر سپرنٹنڈنٹ نے عبایا نہ اتارنے والی طالبات کو امتحانی کمرے سے باہر نکل جانے کا بول دیا۔ طالبات کا کہنا ہے کہ سپرنٹنڈنٹ کی جانب سے عبایا اتار کر پیپرمیں شریک ہونے کا کہا گیا انکار کرنے پر کمرہ امتحان سے نکال دیا گیا۔ اپنے مستقبل کی تاریکی کو مدنظر رکھتے ہوئے مجبورا بغیر دوپٹے کے پیپر دیا جس سے نا صرف ہماری عزت نفس مجروح ہوئی بلکہ حیا کے تقاضے بھی پامال ہوئے۔طالبات وزیر اعظم پاکستان عمران خان سے مطالبہ کیا ہے کہ ایک جانب حکومت پاکستان عورتوں کے پردے اورحیا کے تقدس کی بات کرتی ہے تو دوسری جانب تعلیمی محکموں میں طالبات کے سر سے چادر کو اتارا جا رہا ہے جس پر وہ نوٹس لے کر علامہ اقبال اوپن یونیورسٹی کے امتحان میں خواتین کی مردوں کے سامنے عبائے اتارنے جیسی تذلیل سے روکا جائے۔اس حوالے سے وائس چانسلر علامہ اقبال اوپن یونیورسٹی ضیاالقیوم کا کہنا تھا کہ وہ متعلقہ سینٹرز سے معلومات لے کر واقع پر بات کریں گے۔

متعلقہ خبریں

Back to top button

Adblock Detected

We Noticed You are using Ad blocker :( Please Support us By Disabling Ad blocker for this Domain. We don't show any popups or poor Ads.