پاکستانفیچرڈ پوسٹ

ٹرانسپورٹرز اور حکومت ایک بار پھر آمنے سامنے، 15 ستمبر تک ٹرانسپورٹ بحال نہ کی گئی تو ملک بھر کی سڑکوں کو بلاک کر دیں گے، ٹرانسپورٹ مالکان کی دھمکی

حکومت کی غلط پالیسیوں کے باعث ٹرانسپورٹ کا کاروبار تباہ ہوگیا، جہاز، ٹرین، اورنج ٹرین چل سکتی ہے تو پبلک ٹرانسپورٹ بند کرنیکا جواز سمجھ نہیں آتا

ٹرانسپورٹرز اور حکومت ایک بار پھر آمنے سامنے، 15 ستمبر تک ٹرانسپورٹ بحال نہ کی گئی تو ملک بھر کی سڑکوں کو بلاک کر دیں گے، ٹرانسپورٹ مالکان کی دھمکی سامنے آگئی ہے۔

تفصیلات کے مطابق آل پاکستان پبلک ٹرانسپورٹ اونرز فیڈریشن نے پبلک ٹرانسپورٹ کی بندش کے حکومتی فیصلے کو مسترد کرتے ہوئے کہا ہے کہ حکومت ہمارا معاشی قتل بند کرے، 15 ستمبر تک ٹرانسپورٹ بحال نہ کی گئی ملک بھر کی سڑکوں کو بلاک کردیں گے۔ مرکزی چیئرمین حاجی اکرم ذکی، سیکرٹری ملک ظفر، حاجی بجاش خان نیازی، میاں خان بلوچ اور اختر خان نیازی نے دیگر ٹرانسپورٹرز کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ کورونا لاک ڈاون اور حکومت کی غلط پالیسیوں کے باعث ٹرانسپورٹ کا کاروبار تباہ ہوگیا۔ جہاز، ٹرین، اورنج ٹرین چل سکتی ہے تو پبلک ٹرانسپورٹ بند کرنے کا جواز سمجھ نہیں آتا، اس فیصلے سے غریب آدمی کے گھر کا چولہا بند ہوگیا۔

انہوں نے کہا حکومت سے مطالبہ ہے کہ ٹرانسپورٹ کی بندش کے فیصلے کو فوری واپس لیا جائے ورنہ پورا ملک جام کردیں گے۔ٹرانسپوٹرز نے کہا کہ پبلک ٹرانسپورٹ کی بندش کا فیصلہ فوری واپس لیا جائے، پبلک ٹرانسپورٹ کے ساتھ سوتیلی ماں جیسا سلوک کیا جا رہا ہے۔ واضح رہے ملک بھر میں کورونا کیسز میں اضافے کی وجہ سے انٹراسٹی ٹرانسپورٹ بند ہے، جس سے نہ صرف عوام کو پریشانی کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے، بلکہ ٹرانسپوٹرز کو بھی معاشی طور پر پریشانیکا سامنا ہے۔

متعلقہ خبریں

Back to top button

Adblock Detected

We Noticed You are using Ad blocker :( Please Support us By Disabling Ad blocker for this Domain. We don't show any popups or poor Ads.