پاکستان

نیب نے شہباز شریف اور سلیمان شہباز کے برطانوی اکاؤنٹس کی تحقیقات سے لاتعلقی کا اظہار کر دیا

بیرون ملک سے یہ تمام نیکسس آپریٹ کرنے والا ملزم بھی نیب نے گرفتار کیا اور نیکسس آپریٹ کرنے والے ملزم کا بیان نیب ریفرنس کا حصہ ہے

قومی احتساب بیورو (نیب)نے مسلم لیگ (ن)کے صدر و قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف شہباز شریف اور ان کے بیٹے سلیمان شہباز کے برطانوی اکاؤنٹس کی تحقیقات سے لاتعلقی ظاہر کردی۔

تفصیلات کے مطابق نیب ذرائع کا کہنا تھا کہ شہباز شریف اور سلیمان شہباز کے برطانوی اکانٹس کی تحقیقات سے نیب کا کوئی تعلق نہیں ہے جبکہ نیب کبھی سلیمان شہباز اور شہباز شریف کے برطانیہ میں اکانٹس یا منی لانڈرنگ کیس کی تحقیقات کا حصہ نہیں رہا۔ نیب ذرائع کا کہنا ہے کہ نیب نے باپ بیٹے سے برطانیہ میں موجود ان دواکانٹس پرکبھی سوالات نہیں کیے۔

ذرائع نے بتایاکہ نیب نے تاحال بیرون ملک سے بوگس اکاؤنٹس کے ذریعے ٹی ٹیز کی انویسٹی گیشن کی ہے، ٹی ٹیز مہارت سے اربوں روپے حاصل کرنے کیلئے استعمال کی گئیں، شہبازشریف اورخاندان نے ٹی ٹیز سے سوا 2 ارب روپے ذاتی اکاؤنٹس میں منتقل کرائے جبکہ بذریعہ ٹی ٹیز سوا دو ارب روپے برطانیہ اوریواے ای سے منتقل کرائے۔ نیب ذرائع کے مطابق بوگس اکانٹس کے ذریعے ٹی ٹیز کا معاملہ ہی نیب کا کیس تھا، جن اکانٹ ہولڈرز سے بیرون ملک سے رقوم منتقل کرائی وہ کبھی بیرون ملک گئے ہی نہیں۔

نیب ذرائع کا کہنا ہے کہ بیرون ملک سے یہ تمام نیکسس آپریٹ کرنے والا ملزم بھی نیب نے گرفتار کیا اور نیکسس آپریٹ کرنے والے ملزم کا بیان نیب ریفرنس کا حصہ ہے، نیب کا کیس برطانوی نیشنل کرائم ایجنسی (این سی اے)کے کیس سے بالکل مختلف اور ٹھوس شواہدپرمبنی ہے۔ نیب ذرائع نے بتایا کہ نیب کا کیس احتساب عدالت لاہور میں زیر سماعت ہے، سلیمان شہبازکو این سی اے سیکلین چٹ ملی ہے تو انہیں پاکستان واپس آجاناچاہیے، وہ وقت ضائع کیے بغیر واپس آئیں تاکہ دودھ کادودھ اور پانی کا پانی ہو سکے۔

متعلقہ خبریں

Back to top button

Adblock Detected

We Noticed You are using Ad blocker :( Please Support us By Disabling Ad blocker for this Domain. We don't show any popups or poor Ads.