پاکستانفیچرڈ پوسٹ

پنجاب حکومت ان ایکشن، نشہ آور مشروب پلا کر نرسز اور لیڈی ڈاکٹرز کی قابل اعتراض ویڈیوز بنانے والے ڈاکٹر کی شامت آگئی، لائسنس کینسل، کڑی سے کڑی سزا دینے کا فیصلہ

ایف آئی اے نے جناح اسپتال کے ڈاکٹر کو نرسوں اور لیڈی ڈاکٹرز کی قابل اعتراض ویڈیوز بنانے کی وجہ سے حراست میں لے لیا ہے

پنجاب حکومت ان ایکشن، نشہ آور مشروب پلا کر نرسز اور لیڈی ڈاکٹرز کی قابل اعتراض ویڈیوز بنانے والے ڈاکٹر کی شامت آگئی، لائسنس کینسل، کڑی سے کڑی سزا دینے کا فیصلہ کرلیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار کے حکم پر وفاقی تحقیقاتی ادارے (ایف آئی اے)نے نشہ آور مشروب پلا کر نرسز اور لیڈی ڈاکٹرز کی قابل اعتراض ویڈیوز بنانے کے الزام میں جناح اسپتال میں تعینات ڈاکٹر کو گرفتار کیا۔ ذرائع کے مطابق ایف آئی اے نے بڑی کارروائی کرتے ہوئے جناح اسپتال کے ڈاکٹر کو نرسوں اور لیڈی ڈاکٹرز کی قابل اعتراض ویڈیوز بنانے کی وجہ سے حراست میں لے لیا ہے۔

ایف آئی اے حکام نے ڈاکٹر کے موبائل سے نرسز اور لیڈی ڈاکٹر کی پچاس قابل اعتراض ویڈیو برآمد کیں جبکہ ملزم کے خلاف مقدمہ درج کرکے تفتیش کا آغاز کردیا گیا۔لیڈی ڈاکٹر اور نرسز کی نازیبا ویڈیو بنانے والے ڈاکٹر کو معطل کر دیا گیا ہے۔ محکمہ صحت پنجاب کی جانب سے جاری اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ ملزم جناح اسپتال میں بطور ڈاکٹر تعینات تھا۔ ملزم کے خلاف ایک خاتون نے نازیبا ویڈیو بنانے کی شکایت کی تھی۔صوبائی محکمہ صحت کے مطابق ایف آئی اے سائبر کرائم ونگ نے مقدمہ درج کرکے ڈاکٹر کو گرفتار کیا اور اب معطل بھی کر دیا ہے۔ایف آئی اے حکام کے مطابق جناح اسپتال لاہور کے ڈاکٹر عبداللہ حارث کے خلاف چونگی امرسدھو لاہور کی رہائشی ایک متاثرہ خاتون نے سائبر کرائم ونگ میں درخواست دی تھی،ملزم متاثرہ خاتون کی نازیبا ویڈیوز سے اسے بلیک میل کر رہا تھا۔

متعلقہ خبریں

Back to top button

Adblock Detected

We Noticed You are using Ad blocker :( Please Support us By Disabling Ad blocker for this Domain. We don't show any popups or poor Ads.