پاکستان

وزیراعظم کو تحائف ملنے کا معاملہ، حکومت نے ایک بار پھر مہلت مانگ لی

عدالت نے اٹارنی جنرل کو طلب کر رکھا تھا تاہم وہ ایک اور کیس میں مصروفیات کے باعث پیش نہ ہوئے جس پر سماعت ملتوی کر دی گئی

حکومت نے غیر ملکی سربراہان مملکت کی جانب سے وزیراعظم عمران خان کو ملنے والے تحائف کی تفصیل بتانے کے لیے ایک بار پھر اسلام آباد ہائی کورٹ سے مہلت مانگ لی۔

تفصیلا ت کے مطابق اسلام آباد ہائی کورٹ میں جسٹس میاں گل حسن اورنگ زیب نے کابینہ ڈویژن کے ذریعے دائر وفاق کی درخواست پر سماعت کی۔ سماعت میں پاکستان انفارمیشن کمیشن کے اس آرڈر کو چیلنج کیا گیا، جس میں معلومات تک رسائی کے ایکٹ کے تحت شہری رانا ابرار خالد کو یہ معلومات فراہم کرنے کا حکم دیا گیا تھا کہ وزیراعظم عمران خان کو وزارت عظمی کا حلف اٹھانے کے بعد غیر ملکی سربراہان مملکت کی جانب سے کتنے تحائف ملے؟ جنہیں توشہ خانہ میں جمع کرایا گیا اور اس میں سے کتنے تحائف وزیراعظم نے اپنے استعمال کے لیے نکلوائے؟ کابینہ ڈویژن نے درخواست میں مؤقف اختیار کیاہے کہ یہ کلاسیفائیڈ معلومات ہیں جو شہری کو فراہم نہیں کر سکتے۔ عدالت نے درخواست پر معاونت کے لیے اٹارنی جنرل کو طلب کر رکھا تھا تاہم وہ ایک اور کیس میں مصروفیات کے باعث پیش نہ ہوئے جس پر سماعت ملتوی کر دی گئی۔

متعلقہ خبریں

Back to top button

Adblock Detected

We Noticed You are using Ad blocker :( Please Support us By Disabling Ad blocker for this Domain. We don't show any popups or poor Ads.