پاکستانفیچرڈ پوسٹ

ایف اے ٹی ایف اجلاس، پاکستان گرے لسٹ سے باہر نکلے گا یا بلیک لسٹ میں جائے گا؟ فیصلہ کیا ہوگا؟ چونکا دینے والا انکشاف منظر عام پر آگیا

ایف اے ٹی ایف کا جائزہ اجلاس کل پیرس میں ہوگا، فیٹف اجلاس میں پاکستان کے اسٹیٹس میں تبدیلی سے متعلق فیصلے کا امکان ہے

ایف اے ٹی ایف اجلاس، پاکستان گرے لسٹ سے باہر نکلے گا یا بلیک لسٹ میں جائے گا؟ فیصلہ کیا ہوگا؟ چونکا دینے والا انکشاف منظر عام پر آگیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق ایف اے ٹی ایف کا جائزہ اجلاس کل پیرس میں ہوگا، اجلاس میں منی لانڈرنگ اور دہشت گردوں کی مالی معاونت سے متعلق اقدامات کا جائزہ لیا جائیگا۔ ایف اے ٹی ایف کے گزشتہ اجلاس میں پاکستان کو اپریل2022 تک گرے لسٹ میں رکھا گیا تھا۔ یاد رہے اس سے قبل 4 مارچ 2022 کے اجلاس میں ایف اے ٹی ایف کا پاکستان کو گرے لسٹ میں برقرار رکھنے کا فیصلہ کیا تھا۔ اجلاس کے آخری روز منی لانڈرنگ اور دہشت گردی کی مالی معاونت سے متعلق پاکستان کے 5 ایکشن پلانز کا جائزہ لیا گیا تھا۔ ایف اے ٹی ایف نے اعتراف کیا کہ پاکستان 28 میں سے 27 نکات پر عمل کر چکا، اس کے باوجود پاکستان کو مزید 4 ماہ کیلئے گرے لسٹ میں رکھنے کا فیصلہ کرتے ہوئے جون تک اہداف حاصل کرنے کا وقت دیا۔ یہاں واضح رہے کہ پاکستان 2018 سے ایف اے ٹی ایف کی گرے لسٹ میں موجود ہے۔ سابق وفاقی وزیر خزانہ سینیٹر شوکت ترین کا کہنا ہے کہ ایف اے ٹی ایف نے پاکستان کو گرے لسٹ میں رکھنے کا فیصلہ مخالف لابی کے دبا میں کیا۔

متعلقہ خبریں

Back to top button

Adblock Detected

We Noticed You are using Ad blocker :( Please Support us By Disabling Ad blocker for this Domain. We don't show any popups or poor Ads.