پاکستان

فروغ نسیم کا الزام،جسٹس فائز عیسیٰ وکلا انرولمنٹ کمیٹی سے دستبردار

سابق وزیرقانون فروغ نسیم نےلائسنس بحالی کیلئےپاکستان بارکونسل میں درخواست دے رکھی ہے

سابق وزیرقانون فروغ نسیم نےلائسنس بحالی کیلئےپاکستان بارکونسل میں درخواست دے رکھی ہے۔ انہوں نےلائسنس بحالی میں تاخیرپر جسٹس قاضی فائزعیسی پرجانبداری کا الزام لگایا تھا۔ جسٹس قاضی فائزعیسی نےدستبردارہونےسےمتعلق پاکستان بارکونسل کوخط لکھ کرآگاہ کیا۔ انہوں نےکہا کہ فروغ نسیم کی لائسنس بحالی کی درخواست جسٹس قاضی فائزعیسی کےسامنےرکھی ہی نہیں گئی،انرولمنٹ کمیٹی کے کسی ممبرنےجسٹس قاضی فائزعیسی سےکوئی سفارش نہیں کی،فروغ نسیم نےجسٹس قاضی فائزعیسی پربطورچیئرمین وکلا انرولمنٹ کمیٹی جانبداری کا الزام لگایا کہ 8 اپریل کولائسنس بحالی کی درخواست دی تاہم بدنیتی کےباعث منظورنہ کی گئی،الزام لگایا گیا کہ انرولمنٹ کمیٹی ممبران نےدرخواست منظورکرنےکی سفارش کی مگرجسٹس قاضی فائزعیسی ٹس سےمس نہ ہوئے۔

متعلقہ خبریں

Back to top button

Adblock Detected

We Noticed You are using Ad blocker :( Please Support us By Disabling Ad blocker for this Domain. We don't show any popups or poor Ads.