پاکستانفیچرڈ پوسٹ

آئندہ مالی سال کے بجٹ میں کتنے ارب روپے کے اضافی ٹیکسز لگائے جائیں گے؟ چیئرمین ایف بی آر نے عوام کو چونکا کر رکھ دینے والی خبر سنا دی

بجٹ میں عام آدمی کو ریلیف فراہم کیاگیا ہے جبکہ مقامی ٹیکسز 52 فیصد اور 48 فیصد ہمارے درآمدات کے ٹیکسز ہیں

آئندہ مالی سال کے بجٹ میں کتنے ارب روپے کے اضافی ٹیکسز لگائے جائیں گے؟ چیئرمین ایف بی آر نے عوام کو چونکا کر رکھ دینے والی خبر سنا دی ۔

تفصیلات کے مطابق فیڈرل بورڈ آف ریونیو (ایف بی آر)کے چیئرمین عاصم احمد نے کہا ہے کہ آئندہ مالی سال کے بجٹ میں 355 ارب روپے کے اضافی ٹیکسز لگائے گئے ہیں۔ چیئرمین ایف بی آرکا کہنا تھاکہ بجٹ میں عام آدمی کو ریلیف فراہم کیاگیا ہے جبکہ مقامی ٹیکسز 52 فیصد اور 48 فیصد ہمارے درآمدات کے ٹیکسز ہیں۔ ان کا کہنا تھاکہ تنخواہ دار طبقے کو حکومت نے ریلیف فراہم کیا ہے اور بجٹ میں 355 ارب روپے کے اضافی ٹیکسز لگائے گئے ہیں۔

چیئرمین ایف بی آر کے مطابق زیادہ آمدن والے افراد پر ٹیکس لگایا گیا ہے اور نان فائلرز پر اضافی ٹیکس لگائے گئے ہیں، ریئل اسٹیٹ، فارم ہاسز پر ٹیکس بڑھائے گئے ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ ٹریکٹرکی درآمد اور سولرپینل پرکسٹم ڈیوٹی میں چھوٹ دی گئی ہے جبکہ ایل ای ڈی لائٹس کو سستا کرنے کے اقدامات کییہیں اور ادویات کے خام مال کو سستا کیا گیا ہے، اس کے علاوہ بیجوں، ٹریکٹرز، پاور پلانٹس کی مشینری کی درآمد پر سیلز ٹیکس ختم کردیا گیا ہے۔ چیئرمین ایف بی آر کا کہنا تھاکہ اگلے سال کیلئے ٹیکس ہدف 7004 ارب روپے مقرر کیا گیا ہے اور بجٹ میں 355 ارب روپے کے ٹیکس اقدامات کیے گئے ہیں، 75 فیصد ٹیکس تجاویزانکم ٹیکس سمیت ڈائریکٹ ٹیکسزسے متعلق ہیں، پورا فوکس ڈائریکٹ ٹیکسوں کی طرف ہے۔

متعلقہ خبریں

Back to top button

Adblock Detected

We Noticed You are using Ad blocker :( Please Support us By Disabling Ad blocker for this Domain. We don't show any popups or poor Ads.