پاکستان

بازار جلد بند کرنیکا فیصلہ، حکومت اور تاجران میں ٹھن گئی

کاروبار پہلے ہی تباہ حالی کا شکار ہیں، بازار جلد بند کرنے کا فیصلہ عید تک مؤخر کیا جائے' ہم شام 8 بجے دکانیں بند نہیں کریں گے : خالد پرویز

بازار جلد بند کرنیکا فیصلہ، حکومت اور تاجران میں ٹھن گئی ‘ آل پاکستان انجمن تاجران کے صدر خالد پرویز نے مارکیٹیں اور بازار جلد بند کرنے کا حکومتی فیصلہ مسترد کر دیا۔

تفصیلات کے مطابق مرکزی انجمن تاجران پاکستان کے صدر خالد پرویز کا کہنا ہے کہ کاروبار پہلے ہی تباہ حالی کا شکار ہیں، بازار جلد بند کرنے کا فیصلہ عید تک مؤخر کیا جائے۔ اس حوالے سے تاجر رہنما اجمل بلوچ نے کہا کہ شام 8 بجے دکانیں بند کرنے کی تجویز کو مسترد کرتے ہیں، تاجر کسی صورت اپنا کاروبار شام 8 بجے بند نہیں کریں گے، حکومت تاجر برادری کیلئے آسانیاں پیدا کرے نہ کہ مشکلات، ہر اس سیکٹر کی بجلی بند کریں جو مفت دی جارہی ہے۔ اجمل بلوچ نے کہا کہ حکمران اپنے اے سی بند کریں گے تو غریب کا پنکھا چلے گا، حکومت بجلی نہیں دیسکتی تو جنریٹیر چلا کر کام کرنے دے، اتنی شدید گرمی میں دن میں خریدار کا گھر سے نکلنا ممکن ہی نہیں، خریدار شام سے پہلے گھر سے خریداری کیلئے نہیں نکلتا،صبح دکانیں کھولنے کی تجویز بھی نا قابل عمل ہے۔ سیکرٹری جنرل آل پاکستان انجمن تاجران نعیم میر کا کہنا ہے کہ حکومت فیصلے تھوپنے کے بجائے ہم سے مشاورت کرے، حکومت تاجر نمائندوں، پاور ڈسٹری بیوشن کمپنیوں کی مشترکہ کمیٹیاں بنائے، حکومت کیساتھ مشروط تعاون کرنے کو تیار ہیں۔

متعلقہ خبریں

Back to top button

Adblock Detected

We Noticed You are using Ad blocker :( Please Support us By Disabling Ad blocker for this Domain. We don't show any popups or poor Ads.