پاکستان

ایف بی آر کا کارنامہ، پی ٹی آئی نے کریڈٹ لے لیا

ملک کی تاریخ میں پہلی بارفیڈرل بورڈ آف ریونیو(ایف بی آر) نے 6 ہزارارب روپےتک ٹیکس وصول کیا

ملک کی تاریخ میں پہلی بارفیڈرل بورڈ آف ریونیو(ایف بی آر) نے 6 ہزارارب روپےتک ٹیکس وصول کیا،جس کا کریڈٹ پاکستان تحریک انصاف نےلےلیا۔ سماجی رابطےکی ویب سائٹ ٹوئٹرپرجاری اپنےبیان میں سابق وزیرخزانہ شوکت ترین نےکہا کہ عمران خان کی قیادت میں مضبوط معاشی ترقی اورٹیکس پالیسی سےممکن ہوا۔ انہوں نےکہا کہ اب ناقص ٹیکس پالیسیوں کی طرف دوبارہ نہیں جانا چاہیے،پہلےسےٹیکس دہندہ لوگوں پرنئےٹیکس نہ لگائےجائیں۔

شوکت ترین کا کہنا تھا کہ معیشت کےپیداواری شعبوں کواوورٹیکس کرنےکی پالیسیوں کی طرف واپس نہ جائیں۔ دوسری جانب پاکستان تحریک انصاف کےترجمان مزمل اسلم نےایف بی آر،پی ٹی آئی اورشوکت ترین کومبارک باد دیتےہوئےکہا کہ 20 سالوں میں یہ پہلا موقع ہےکہ ایف بی آرنےنہ صرف اپنےہدف کوعبورکیا ہےبلکہ جی ڈی پی میں 2 فیصد ٹیکس بھی شامل کیا ہے۔

انہوں نےیہ بھی کہا کہ’امپورٹڈ حکومت کوپی ٹی آئی سےسبق سیکھنا چاہیے‘۔ خیال رہےکہ ایف بی آرنےگزشتہ سال کےمقابلےمیں رواں برس ایک ہزارارب سےزیادہ ٹیکس وصول کیا ہے۔ ایف بی آرنے 2021 میں 4732 ارب روپے کا ٹیکس وصول کیا تھا جبکہ رواں سال ٹیکس وصولی 5 ہزار 829 ارب ہے۔ فیڈرل بورڈ آف ریونیو(ایف بی آر) کی جانب سےجاری کیےگئےاعلامیےکےمطابق رواں مالی سال انکم ٹیکس کی مد میں 2 ہزار 205 ارب ،سیلزٹیکس کی مد میں 2 ہزار 773 ارب روپےاورکسٹمز ڈیوٹی کی مد میں 1007 ارب روپےاکٹھےہوئےہیں۔

متعلقہ خبریں

Back to top button

Adblock Detected

We Noticed You are using Ad blocker :( Please Support us By Disabling Ad blocker for this Domain. We don't show any popups or poor Ads.