پاکستانفیچرڈ پوسٹ

2014ء میں ایک موقع ایسا بھی آیا تھا جب نوازشریف کے ملٹری سیکرٹری نے کہا کہ ہیلی کاپٹر تیار ہے لیکن؟ ماضی کے پنوں سے ایک اور حقیقت بے نقاب ہوگئی

دھرنے کے دوران ملٹری سیکرٹری نے وزیراعظم کو بتایا سارے راستے بند ہیں اور دھرنے کے شرکاء وزیراعظم ہاؤس کے گیٹ پر پہنچ چکے ہیں

2014ء میں ایک موقع ایسا بھی آیا تھا جب نوازشریف کے ملٹری سیکرٹری نے کہا کہ ہیلی کاپٹر تیار ہے لیکن؟ ماضی کے پنوں سے ایک اور حقیقت بے نقاب ہوگئی۔

تفصیلات کے مطابق سینیٹ کی قائمہ کمیٹی برائے انسانی حقوق کے اجلاس میں بات کرتے ہوئے سینیٹر عرفان صدیقی نے کہا کہ 2014ء میں پولیس اہلکاروں کو شاہراہ دستور پر لٹا کر مارا گیا۔ دھرنے کے دوران ملٹری سیکرٹری نے وزیراعظم کو بتایا سارے راستے بند ہیں اور دھرنے کے شرکا وزیراعظم ہاؤس کے گیٹ پر پہنچ چکے ہیں۔ان کا کہنا تھا کہ ملٹری سیکرٹری نے کہا کہ میں نے ہیلی کاپٹر منگوا لیا ہے، ایک ہی راستہ بچا ہے۔ سینیٹر عرفان صدیقی نے کہا کہ میاں نواز شریف نے ملٹری سیکرٹری کو جواب دیتے ہوئے کہا کہ یہ اگر مجھے مار کر وزیراعظم بننا چاہتے ہیں تو آکر بن جائے۔ سینیٹر مشاہد حسین سید نے کہا کہ پاکستان تحریک انصاف کی جانب سے 2014 میں کیا گیا دھرنا سپانسرڈ تھا۔انہوں نے مزید کہا کہ 2014 کا دھرنا دہشت پیدا کرنے کے لیے دیا گیا تھا اور اس میں بھی پولیس پر تشدد ہوا۔ سینیٹر مشاہد حسین سید نے کہا کہ اس سپانسرڈ دھرنے نے پوری پارلیمنٹ کو یرغمال بنا دیا تھا۔

متعلقہ خبریں

Back to top button

Adblock Detected

We Noticed You are using Ad blocker :( Please Support us By Disabling Ad blocker for this Domain. We don't show any popups or poor Ads.