پاکستانفیچرڈ پوسٹ

کیا وزیراعلیٰ پنجاب حمزہ شہباز کے اختیارات میں عدالت نے کمی کر دی ہے؟ چونکا دینے والی سچائی سامنے آنے کے بعد ملکی سیاست میں نیا بھونچال پیدا ہوگیا

حمزہ شہباز کے اختیارات کم کرنے کا تو سوال ہی پیدا نہیں ہوتا' عطاء تارڑ، حمزہ شہباز کو اسٹاپ گیپ ارینجمنٹ کے تحت محدود اختیارات دیئے جائیں گے: فیصل چوہدری

کیا وزیراعلیٰ پنجاب حمزہ شہباز کے اختیارات میں عدالت نے کمی کر دی ہے؟ چونکا دینے والی سچائی سامنے آنے کے بعد ملکی سیاست میں نیا بھونچال پیدا ہوگیا ۔

تفصیلات کے مطابق وزیر داخلہ پنجاب عطا اللہ تارڑ نے کہا ہے کہ حمزہ شہباز کے اختیارات کم کرنے کا تو سوال ہی پیدا نہیں ہوتا،تحریک انصاف کے وکیل فیصل چوہدری نے کہا کہ حمزہ شہباز کو اسٹاپ گیپ ارینجمنٹ کے تحت محدود اختیارات دیئے جائیں گے، عبدالقیوم صدیقی ،سینئر صحافی و تجزیہ کار حامد میر،ماہر قانون حیدروحید،ماہر قانون منیب فاروق ،سینئر صحافی و تجزیہ کار اطہر کاظمی اور سینئر تجزیہ کار حبیب اکرم نے بھی اظہار خیال کیا۔ تحریک انصاف کے وکیل فیصل چوہدری نے کہا کہ وزیراعلی پنجاب کیلئے ووٹنگ 22جولائی تک لے جانا پی ٹی آئی کی بڑی کامیابی ہے، 20نشستوں پر انتخابات اور 5مخصوص نشستوں کے نوٹیفکیشن کے بعد رن آف الیکشن ہوگا، ایوان میں اس وقت جس کی اکثریت ہوگی وہ وزیراعلی بن جائے گا، حمزہ شہباز کا بطور وزیراعلی نوٹیفکیشن ختم ہوجائے گا، حمزہ شہباز اسٹاپ گیپ ارینجمنٹ کے تحت محدود اختیارات دیئے جائیں گے، سپریم کورٹ صاف وشفاف الیکشن کیلئے گائیڈ لائن فراہم کرے گا۔

فیصل چوہدری کا کہنا تھا کہ لاہور ہائیکورٹ کے فیصلے میں کافی ابہام تھے جسے سپریم کورٹ نے دور کیا ہے، ضمنی انتخابات میں منتخب ہونے والے ایم پی ایز اپنی پارٹی کو ہی ووٹ کرسکیں گے، کسی ایم پی اے کا دوسری پارٹی کو دیا گیا ووٹ شمار نہیں ہوگا۔وزیرداخلہ پنجاب عطا اللہ تارڑ نے کہا کہ ہمارے نمبرز کل بھی پورے تھے آج بھی پورے ہیں،مخالفین حمزہ شہباز کو بطور وزیراعلی ڈی سیٹ کروانا چاہتے تھے، ہمارے پاس 177ووٹ ہیں مخالفین پر اس وقت بھی 9ووٹوں کی برتری حاصل ہے، عدالتی فیصلے کے بعد وزیراعلی، کابینہ اور حکومت بحال رکھی گئی ہے، عدالت میں مخالفین کے تین گروپس الگ الگ کھڑے تھے، بابر اعوان ، پرویز الہی اور سبطین خان الگ الگ باتیں کررہے تھے، آج بھی الیکشن کرواتے تو حمزہ شہباز ہی وزیراعلی ہوتے۔ عطا اللہ تارڑ کا کہنا تھا کہ حمزہ شہباز کے اختیارات کم کرنے کی پی ٹی آئی کی استدعا منظور نہیں کی گئی، سپریم کورٹ نے کیئر ٹیکر کا لفظ استعمال کرنے سے انکار کردیا، جن حلقوں میں ضمنی انتخابات ہورہے ہیں وہاں وزیراعلی اپنے اختیارات استعمال نہیں کرسکتے،حمزہ شہباز کے اختیارات کم کرنے کا تو سوال ہی پیدا نہیں ہوتا، فیصل چوہدری بھی فواد چوہدری جیسی مضحکہ خیز باتیں کررہے ہیں۔ عطا اللہ تارڑ نے کہا کہ عدالت نے پہلی گنتی سے 25ووٹ مائنس کرنے کا حکم دیا اس کا مطلب حمزہ شہباز کا انتخاب کالعدم قرار نہیں دیا گیا، ہم رن آف الیکشن کی طرف جارہے ہیں، اب صرف ایوان میں موجود لوگوں کی اکثریت درکار ہے، 22جولائی کو ووٹنگ میں ضمنی انتخابات میں کامیاب ہونے والے 25ایم پی ایز بھی شامل ہوں گے، عدالت نے حمزہ شہباز کو ڈی نوٹیفائی کرنے کی کوئی بات نہیں کی، پی ٹی آئی کے وکیل نے کہا کہ کابینہ نہیں ہے تو چیف جسٹس نے فرمایا کابینہ موجود ہے پرسوں وزیرقانون ہماری میٹنگ میں موجود تھے۔

متعلقہ خبریں

Back to top button

Adblock Detected

We Noticed You are using Ad blocker :( Please Support us By Disabling Ad blocker for this Domain. We don't show any popups or poor Ads.