پاکستان

احسن اقبال کا بدتمیزی کرنیوالی فیملی کیخلاف کارروائی سےانکار

وفاقی وزیر نےکہا کہ عمران نیازی کی سیاست نفرت کوفروغ دے رہی ہے،میں سیاست میں نیا نہیں، 3 دہائیاں ہوگئی ہیں

وفاقی وزیرمنصوبہ بندی احسن اقبال نےاُن کےساتھ ریسٹورنٹ میں بدتمیزی کرنےوالی فیملی کےخلاف کارروائی سےانکارکردیا۔ لاہورمیں میڈیا سےگفتگوکرتےہوئےاحسن اقبال نےکہا کہ قانون اجازت دیتا ہےکہ ہلڑبازی کرنے والوں کے خلاف قانونی کارروائی کروں لیکن اس واقعے میں خواتین اور بچے شامل تھے، اس لیے قانونی کارروائی نہیں کررہا۔

احسن اقبال نے کہا کہ ایسے واقعات کی حوصلہ شکنی ہونی چاہیے، اگر میرے ساتھ سیکیورٹی گارڈ ہوتا یا کوئی جذباتی حمایتی ہوتا تو صورتحال گھمبیر ہوسکتی تھی، کل سے اندرون و بیرون ملک سے واقعے کی مذمت کی جا رہی ہے۔ اُنہوں نے کہا کہ ہم معاشرے کو انتہا پسندی سے پاک کرنے کی کوشش کر رہے ہیں کیونکہ نفرت اور انتہا پسندی کے نظریات کینسر کی طرح پھیلتے ہیں۔

وفاقی وزیر نے کہا کہ عمران نیازی کی سیاست نفرت کو فروغ دے رہی ہے،  میں سیاست میں نیا نہیں، 3 دہائیاں ہوگئی ہیں، پی ٹی آئی کے لوگوں سے کہتا ہوں جہالت پر مبنی کام نہ کریں۔ احسن اقبال نے کہا کہ عمران نیازی لوگوں کو استعمال کرکے انہیں ٹشو پیپر کی طرح پھینک دیتا ہے، عمران خان کی محبت میں شرمناک کارروائیاں کرنے والے ٹھنڈے دل سے سوچیں، کیا ان کا لیڈر بھی ان کے ساتھ اتنی محبت کرتا ہے۔

اُنہوں نے یہ بھی کہا کہ مجھے بتانے کی ضرورت نہیں کہ ملک کے لیے میری کیا خدمات ہیں، مجھے پی ٹی آئی کے کسی سرٹیفیکیٹ کی ضرورت نہیں، عمران خان پچھلے 10 سال سے چور چور کی مہم چلا رہا ہے، چار سال کی حکومت میں عمران خان ایک بھی الزام ثابت نہیں کر سکا۔ اُن کا کہنا تھا کہ جھوٹ اور الزام تراشیوں کا نتیجہ ہے کہ یہ سڑکوں پر دھکے کھا رہا ہے، سیاسی رہنماؤں کو اپنے کارکنوں کی تربیت کرنا ہوتی ہے جبکہ عمران خان حکومت چلانے اور کارکنوں کی تربیت کرنے میں ناکام رہے۔

احسن اقبال نےمزید کہا کہ میرے خیال میں عمران نیازی کوایک ماہرنفسیات کی ضرورت ہے۔ واضح رہےکہ گزشتہ روزاحسن اقبال کےساتھ ایک نجی ریسٹورنٹ میں بدتمیزی کا واقعہ پیش آیا تھا۔ جس پراحسن اقبال کا اپنےٹوئٹ میں کہنا تھا کہ ’آج بھیرہ کےایک ریسٹورنٹ میں ایک فیملی سے مڈ بھیڑہوئی، یہ فیملی بظاہرخود کوایلیٹ سمجھتی ہےمگراُنہوں نے مکالمہ کرنےکی بجائے جاہلوں کی طرح نعرہ بازی شروع کر دی‘۔ احسن اقبال نے مزید کہا کہ جب یہ نعرہ بازی سے باز نہ آئے تولوگوں نے بھی نعرے لگا دیے ’گوگی پیرنی کا حساب دو‘۔

متعلقہ خبریں

Back to top button

Adblock Detected

We Noticed You are using Ad blocker :( Please Support us By Disabling Ad blocker for this Domain. We don't show any popups or poor Ads.