پاکستانفیچرڈ پوسٹ

سیلاب زدہ علاقوں میں پانی اور آلودہ خوراک سے کون کون سی جان لیوا بیماریاں بڑھنے کا خدشہ ہے؟ قومی ادارہ صحت نے پاکستانیوں کو تشویشناک خبر سنا دی

سیلاب زدہ علاقوں میں اسہال، ٹائیفائیڈ، ہیضہ،ہیپا ٹائٹس اے اور ای، ڈینگی، ملیریا، چکن گنیا جیسے ممکنہ امراض بڑھنے کا خدشہ ہے

سیلاب زدہ علاقوں میں پانی اور آلودہ خوراک سے کون کون سی جان لیوا بیماریاں بڑھنے کا خدشہ ہے؟ قومی ادارہ صحت نے پاکستانیوں کو تشویشناک خبر سنا دی ۔

تفصیلات کے مطابق قومی ادارہ صحت نے وفاقی وزرات صحت کی ہدایت پر ہیلتھ ایڈوائزری جاری کر دی۔ قومی ادارہ صحت کی طرف سے جاری ہیلتھ ایڈوائزری کے مطابق سیلاب زدہ علاقوں میں پینے کے پانی کی کمی، آبی آلودگی، غذائی قلت دیکھنے کو مل رہی ہے ، سیلاب کی وجہ سے سیورج سسٹم متاثر ہوا ہے ، آلودہ پانی اور آلودہ خوراک کے باعث ، متعدی انفیکشن کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے۔ ہیلتھ ایڈوائزری میں کہا گیا ہے کہ پانی کے باعث پیدا ہونے والی بیماریوں کی روک تھام کے لیے متعلقہ حکام بروقت اقدامات اٹھائیں ،اسہال ،ٹائیفائیڈ، ہیضہ، ملیریا سمیت دیگر بیماریوں کی روک تھام کے لیے سرویلنس بڑھائی جائے ۔

اس کے علاوہ قومی ادارہ صحت کی جانب سے جاری کردہ ہیلتھ ایڈوائزری کے مطابق متاثرہ علاقوں کے ڈی سی اوز کے زیر اہتمام بیماریوں سے بچا کے لیے ٹاسک فورس ہونی چاہیے اور محکمہ صحت ہیضہ کے کیسز کی سختی سے مانیٹرنگ کرے اور بروقت اقدامات کیے جائیں۔ دوسری جانب وفاقی وزیر صحت عبدالقادر پٹیل نے اپنے پیغام میں کہا ہے کہ وزارت صحت سیلاب زدہ علاقوں میں مسلسل صحت عامہ امور کا جائزہ لے رہی ہے، ڈینگی، ملیریا، چکن گنیا سے بچا ؤکے لیے معمول سے زیادہ حفاظتی انتظامات کی ضرورت ہے۔

متعلقہ خبریں

Back to top button

Adblock Detected

We Noticed You are using Ad blocker :( Please Support us By Disabling Ad blocker for this Domain. We don't show any popups or poor Ads.