پاکستانفیچرڈ پوسٹ

پاکستان تحریک انصاف کے دور حکومت میں اسٹیبلشمنٹ سے ہونے والے دو اختلافات کیا تھے؟ سابق وزیراعظم عمران خان نے بڑی سچائی سے پردہ اٹھا دیا

میرے آرمی چیف سے کبھی تعلقات خراب نہیں ہوئے ،ہم ایک پیج پر تھے،ایک پیج پر اس لیے تھے کیونکہ میرا کوئی پرسنل ایجنڈا نہیں تھا

پاکستان تحریک انصاف کے دور حکومت میں اسٹیبلشمنٹ سے ہونے والے دو اختلافات کیا تھے؟ سابق وزیراعظم عمران خان نے بڑی سچائی سے پردہ اٹھا دیا ۔

تفصیلات کے مطابق سابق وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ میرے آرمی چیف سے کبھی تعلقات خراب نہیں ہوئے تھے،ہماری طاقت یہ تھی کہ ہم ایک پیج پر تھے،ایک پیج پر اس لیے تھے کیونکہ میرا کوئی پرسنل ایجنڈا نہیں تھا،ماضی میں نوازشریف اور آصف زرداری کے اسٹیبلشمنٹ سے اس لیے اختلافات ہوتے تھے کہ یہ پیسے چوری کرکے باہر بھیجتے تھے، آئی ایس آئی کے پاس ساری معلومات ہوتی تھیں اور فوج کو پتہ ہوتا تھا۔ میرا تو ایسا کوئی مسئلہ نہیں تھا لہذا آرمی چیف سے میرے تعلقات بالکل ٹھیک تھے۔تاہم ڈی جی آئی ایس آئی کی تقرری پر ہمارے درمیان ایشو ہوا تھا کیونکہ میں چاہتا تھا کہ سیکیورٹی مسائل کی وجہ سے جنرل فیض سردیوں تک رہیں لیکن ان کا موقف تھا کہ فوج کے اندر اصولوں کے مطابق چلنا ہوتا ہے، ہر ایک کا ایک ٹایم پیریڈ ہوتا ہے۔لیکن میں تب پورے پاکستان کے لیے سوچ رہا تھا۔

متعلقہ خبریں

Back to top button

Adblock Detected

We Noticed You are using Ad blocker :( Please Support us By Disabling Ad blocker for this Domain. We don't show any popups or poor Ads.