پاکستانفیچرڈ پوسٹ

ایڈیشنل سیشن جج زبیا چوہدری کو دھمکانے کا معاملہ، سابق وزیراعظم عمران خان کا یوٹرن، کس کے دبائو میں آ کر الفاظ واپس لینے کا کہا؟ اندر کی بات سامنے آگئی

الفاظ غیر مناسب تھے تو واپس لینے کیلئے تیار ہوں'عد الت تقریر کاسیاق و سباق کے ساتھ جائزہ لے، پوری زندگی قانون اور آئین کی پابندی کی ہے

ایڈیشنل سیشن جج زبیا چوہدری کو دھمکانے کا معاملہ، سابق وزیراعظم عمران خان کا یوٹرن، کس کے دبائو میں آ کر الفاظ واپس لینے کا کہا؟ اندر کی بات سامنے آگئی ۔

تفصیلات کے مطابق سابق وزیراعظم و پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے ایڈیشنل سیشن جج زیبا چوہدری کو دھمکانے کے معاملے پر اسلام آباد ہائی کورٹ کے شوکاز نوٹس پر جواب جمع کرادیا۔ عمران خان نے اپنے جواب میں الفاظ واپس لینے کا کہا ہے۔ جواب میں ان کا کہنا ہے کہ الفاظ غیر مناسب تھے تو واپس لینے کیلئے تیار ہوں۔ ان کا کہنا تھاکہ عدالت تقریر کاسیاق و سباق کے ساتھ جائزہ لے، پوری زندگی قانون اور آئین کی پابندی کی ہے، ججز کے احساسات کو مجروح کرنے پر یقین نہیں رکھتا۔ جواب میں کہا گیا ہے کہ میرے ریمارکس انصاف کی راہ میں مداخلت نہیں تھے، نہ ہی ان ریمارکس کا مقصد عدالتی نظام کی سالمیت اور ساکھ کو کم کرنا تھا۔ ان کا کہنا ہے کہ17 اگست کے حکم کو پہلے ہی پٹیشن میں چیلنج کردیا گیا تھا۔ عمران خان نے استدعا کی ہے کہ توہین عدالت کا شوکاز نوٹس واپس لیا جائے۔

متعلقہ خبریں

Back to top button

Adblock Detected

We Noticed You are using Ad blocker :( Please Support us By Disabling Ad blocker for this Domain. We don't show any popups or poor Ads.