پاکستانفیچرڈ پوسٹ

نشتر اسپتال ملتان میں لاوارث نعشوں کی بے حرمتی کا معاملہ نیا موڑ اختیار کرگیا، ابتدائی انکوائری رپورٹ میں کس کس کو ملزم ٹھہرایا گیا ؟ سب کے نام سامنے آگئے

نعشوں کی بے حرمتی کے واقعے میں غفلت کے ذمہ دار شعبہ اناٹومی کی سربراہ مریم اشرف اور ایس ایچ اوز سمیت 8 افراد کو معطل کردیا گیا

نشتر اسپتال ملتان میں لاوارث نعشوں کی بے حرمتی کا معاملہ نیا موڑ اختیار کرگیا، ابتدائی انکوائری رپورٹ میں کس کس کو ملزم ٹھہرایا گیا ؟ سب کے نام سامنے آگئے ۔

تفصیلات کے مطابق وزیراعلیٰ پنجاب پرویزالٰہی کی زیرصدارت اجلاس ہوا جس میں نشتراسپتال واقعے سے متعلق ابتدائی انکوائری رپورٹ پیش کی گئی۔ وزیراعلیٰ نے پروفیسرڈاکٹرمریم اشرف، ڈاکٹرعبدالوہاب اورڈاکٹرسیرت عباس کوعہدوں سے ہٹانے کا حکم دیا اور اس کے علاوہ نشترمیڈیکل یونیورسٹی ملتان کے ملازمین غلام عباس،محمد سجاد ناصراورعبدالرف کو بھی معطل کردیاگیا۔ پرویز الٰہی نے ایس ایچ اوتھانہ شاہ رکن عالم کالونی عمرفاروق اورایس ایچ او تھاناسیتل ماڑی سعیدسیال کو بھی معطل کردیا۔ وزیراعلیٰ نے غفلت کے ذمہ داروں کے خلاف پیڈا ایکٹ کے تحت بھی کارروائی کا حکم دیا اور کہا کہ کسی بھی صورت میں لاشوں کے ساتھ ایسابرتا قبول نہیں، اس گھنانے واقعے کی جتنی بھی مذمت کی جائے کم ہے۔

متعلقہ خبریں

Back to top button

Adblock Detected

We Noticed You are using Ad blocker :( Please Support us By Disabling Ad blocker for this Domain. We don't show any popups or poor Ads.