پاکستانفیچرڈ پوسٹ

پاکستان تحریک انصاف کا ممکنہ لانگ مارچ ‘ شہریوں کو غیر ضروری ہراساں کرنے کا معاملہ، عدالت عالیہ نے اسلام آباد پولیس کو دیا ایسا حکم کے سب کی بولتی بند ہو گئی

اسلام آباد ہائیکورٹ نے پولیس حکام پر برہمی کا اظہار کرتے ہوئے شہریوں کو غیر ضروری ہراساں کرنے سے روک دیا

پاکستان تحریک انصاف کا ممکنہ لانگ مارچ ‘ شہریوں کو غیر ضروری ہراساں کرنے کا معاملہ، عدالت عالیہ نے اسلام آباد پولیس کو دیا ایسا حکم کے سب کی بولتی بند ہو گئی ۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی)کے ممکنہ لانگ مارچ کے تناظر میں اسلام آباد پولیس نے شہریوں کی لسٹیں بنانے اور ضمانتی بانڈز مانگنے کا اعتراف کرلیا، عدالت نے پولیس حکام پر برہمی کا اظہار کرتے ہوئے شہریوں کو غیر ضروری ہراساں کرنے سے روک دیا۔ چیف جسٹس اطہر من اللہ نے سابق ایڈووکیٹ جنرل نیاز اللہ نیازی کی درخواست پرسماعت کی۔ دوران سماعت اسٹیٹ کونسل شہریوں کو تھانے بلاکر ضمانتی بانڈز لینے پر عدالت کو مطمئن کرنے میں ناکام رہی۔ اسلام آباد ہائی کورٹ نے تھانہ بنی گالہ کے پولیس حکام پر برہمی کا اظہار کرتے ہوئے شہریوں کو غیر ضروری ہراساں کرنے سے روک دیا۔ عدالت کا کہنا تھا کہ ضمانتی بانڈز لینیکی قانونی حیثیت پرپولیس مطمئن نہیں کرسکی، پولیس لسٹوں کی تیاری سے متعلق آئندہ سماعت پرمطمئن کرے۔ چیف جسٹس اطہر من اللہ کے استفسار پر اسٹیٹ کونسل کے نمائندے نے بتایا کہ آئی جی صاحب نے لسٹ بنوائی ہے ہم نے ضمانتی بانڈز کے لیے کہا ہے۔ چیف جسٹس نے کہا کہ یہ ہراسانی ہے، آپ کسی کو کیسے کال کرسکتے ہیں ؟ کس قانون کے تحت پولیس نے ضمانتی بانڈز مانگے ہیں؟ پولیس حکام نے بتایا کہ نقض امن کی وجہ سے ضمانتی بانڈز مانگے تھے، جو حکم تھا اس پر عمل کیا، عدالت نیکہا کہ ضمانتی بانڈز کا پولیس نے جو طریقہ کار اپنایا ہے وہ قانونی طور پر درست نہیں۔ عدالت عالیہ نے اسٹیٹ کونسل کی لسٹ پر آئندہ سماعت پرعدالت کو مطمئن کرنیکا حکم دے دیا۔

متعلقہ خبریں

Back to top button

Adblock Detected

We Noticed You are using Ad blocker :( Please Support us By Disabling Ad blocker for this Domain. We don't show any popups or poor Ads.