کھیل

نیشنل ٹی ٹوئنٹی کپ، ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی، حیدر علی پر جرمانہ عائد

ضابطہ اخلاق کے لیول 1 کی خلاف ورزی کرنے پر ناردرن کے بیٹسمین حیدر علی پر میچ فیس کا 30 فیصد جرمانہ عائد کیاگیا

پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی)نے نیشنل ٹی ٹوئنٹی کپ میں ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی پر حیدر علی پر جرمانہ عائد کردیاانہوں نے امپائر کے فیصلے پر ناراضگی کا اظہار کیا تھا۔

پی سی بی کے مطابق ملتان میں جاری نیشنل ٹی ٹوئنٹی کپ کے پہلے مرحلے کے ساتویں میچ میں کھلاڑی اور سپورٹ اسٹاف کے لیے مقررہ ضابطہ اخلاق کے لیول 1 کی خلاف ورزی کرنے پر ناردرن کے بیٹسمین حیدر علی پر میچ فیس کا 30 فیصد جرمانہ عائد کیاگیا ہے۔ اعلامیے کے مطابق حیدر علی پر سینٹرل پنجاب کے خلاف میچ کے دوران امپائرکے فیصلے پر ناراضی کا اظہار کرنے پر جرمانہ عائد کیا گیا۔ یہ واقعہ میچ کی پہلی اننگز کے نویں اوور کے دوران پیش آیا جب حیدر علی نے عثمان قادر کی گیند پر ایل بی ڈبلیو دیے جانے کے فیصلے پر امپائر کو بلا دکھایا۔

آن فیلڈ امپائرز آفتاب گیلانی اور فیصل خان، تھرڈ امپائر ولید یعقوب اور فورتھ امپائر ناصر حسین نے حیدر علی کو پی سی بی کوڈ آف کنڈکٹ کی شق 2.8 کی خلاف ورزی کرنے پر چارج کیا ہے۔ پی سی بی اعلامیے کے مطابق حیدرعلی نے اپنی غلطی تسلیم کرلی ہے جس پر میچ ریفری افتخار احمد نے ان پر میچ فیس کا 30 فیصد جرمانہ عائد کیا ہے۔

Back to top button