کھیل

مصباالحق کےپاس کپتان کوتبدیل کرنےکا اختیارنہیں

چیف سلیکٹروہیڈ کوچ سرفرازاحمد سےقیادت واپس لئےجانےکےفیصلےپروضاحتیں پیش کرنےمیں مصروف ہیں

پاکستان کرکٹ بورڈ کےچیف سلیکٹروہیڈ کوچ مصباح الحق سابق کپتان سرفرازاحمد سےقیادت واپس لئےجانےکےفیصلے پربدستوروضاحتیں پیش کرنےمیں مصروف ہیں۔ تفصیلات کےمطابق مصباح الحق کودہری ذمہ داری ملنےکےبعد پہلی ہی ہوم سیریزمیں پاکستان ٹیم کوسری لنکا کی بی ٹیم کےہاتھوں ٹی 20 سیریزمیں وائٹ واش شکست ہوگئی تھی جس کےبعد حیران کن طورپرسرفرازاحمد کوتینوں فارمیٹ کی کپتانی سےفارغ کردیا گیا تھا۔

سرفرازاحمد کوکپتان سےہٹاتےہوئےٹیسٹ ٹیم کا قیادت اظہرعلی کوسونپی گئی جبکہ ٹی 20 اورون ڈے انٹرنیشنل ٹیم کا کپتان بابراعظم کومقررکیا گیا جن کی قیادت میں قومی ٹیم ٹی20 میچزتوکھیل چکی ہےالبتہ بطورکپتان بابراعظم نےابھی ون ڈے کیرئیرکا آغاز کرنا ہے۔  ایک انٹرویو میں اس بارے میں سوال پر مصباح الحق نے کہا کہ میرے پاس کپتان کو فارغ کرنے یا مقرر کرنے کا اختیار ہی نہیں ہے بلکہ ایسا صرف کرکٹ بورڈ کے چیئرمین ہی کرسکتے ہیں اور انہوں نے ہی حتمی فیصلہ کیا تھا، یہ درست ہے کہ اس حوالے سے ہماری رائے معلوم کی گئی تھی جوعوام کو بتانے کی نہیں ہے۔

Back to top button