کھیل

انڈین لیگ انٹرنیشنل کرکٹ کیلئےخطرہ

آئی پی ایل دنیا کی سب سےمہنگی ٹی ٹونٹی لیگ ہےجس میں انگلینڈ کے 11 کرکٹرزمختلف فرنچائزسےکھیلتےہیں

انگلینڈ کرکٹ بورڈ کےڈائریکٹرایشلےجائلزنےخدشہ ظاہرکیا ہےکہ اگرانگلش کرکٹرزکوانڈین پریمیئرلیگ (آئی پی ایل) کھیلنےکی اجازت دی گئی توانگلینڈ اپنےبہترین کھلاڑیوں سےمحروم ہوسکتاہے۔ برطانوی نشریاتی ادارے کی رپورٹ کےمطابق ایک انٹرویومیں 48 سالہ ایشلےجائلزکا کہنا تھا کہ فی الحال ایسا محسوس ہوتا ہےکہ ہمارے کرکٹرزانگلینڈ کی جانب سےکھیلنےمیں خوشی محسوس کرتے ہیں لیکن ہمیں سمجھنا ہوگا کہ مستقبل میں ایسا بھی ممکن ہےکہ ہمارے کھلاڑی آئی پی ایل کوقومی ٹیم پرفوقیت دیں گے۔

خیال رہے کہ آئی پی ایل دنیا کی سب سےمہنگی ٹی ٹونٹی لیگ ہےجس میں انگلینڈ کے 11 کرکٹرزمختلف فرنچائزسےکھیلتےہیں۔ ان کھلاڑیوں میں بین سٹوکس،این مورگن،جوفرا آرچر،جوزبٹلر،معین علی اورکرس ووکس سمیت دیگرشامل ہیں۔انگلش کرکٹ بورڈ کی جانب سےخدشہ ظاہر کیا جا رہا ہےکہ آئی پی ایل میں مصروفیت کےباعث اس کےاکثرکھلاڑی نیوزی لینڈ کےخلاف جون میں شروع ہونےوالی ٹیسٹ سریز نہیں کھیل پائیں گے۔

متعلقہ خبریں

Back to top button