کھیل

بھارت کیخلاف میچ میں محمد نواز سے آخری اوور کیوں کروایا گیا؟ مکی آرتھر نے بڑے راز سے پردہ اٹھا دیا

اگر بھارت جدیجا کے بجائے رائٹ ہینڈ بیٹر بھیج دیتا اور محمد نواز کا اسپیل جاری رہتا تو وہ مزید وکٹیں لیکر بھارت کو مشکل میں ڈال سکتے تھے

ایشیا کپ ٹی ٹوٹنئی ٹورنامنٹ کے سلسلہ میں بھارت کیخلاف کھیلے گئے میچ میں محمد نواز سے آخری اوور کیوں کروایا گیا ، مکی آرتھر نے بڑے راز سے پردہ اٹھا دیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان کرکٹ ٹیم کے سابق کوچ مکی آرتھر نے تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ میرے لیے سب سے اہم بات یہ تھی کہ بھارت نے روہت شرما کے آؤٹ ہونے کے بعد لیفٹ ہینڈ بیٹر رویندرا جدیجا کو جلدی بھیج دیا، لیفٹ ہینڈ بیٹر کے آجانے سے پاکستان نے ممکنہ طور پر لیفٹ آرم آف اسپنر محمد نواز کا ایک اوور روک لیا اور میرے خیال میں اس کا فائدہ بھارتی ٹیم کو ہوا۔ خیال رہے کہ بھارت کیخلاف میچ میں محمد نواز کا کردار کافی اہم رہا، پاکستان کا بولنگ اٹیک تین رائٹ آرم فاسٹ بولرز، ایک لیگ اسپنر اور ایک لیفٹ آرم آف اسپنر محمد نواز پر مبنی تھا اور محمد نواز نے شاندار کارکردگی دکھائی۔ اننگز کے آٹھویں اوور میں محمد نواز نے اپنا پہلا اوور کیا اور روہت شرما کو ٹھکانے لگایا، اننگز کے 10 ویں اوور میں نواز نے دوسرا اوور کیا اور اس بار ویرات کوہلی کا شکار کیا، اننگز کا بارہواں اوور بھی نواز نے پھینکا تاہم بھارت کی جانب سے لیفٹ آرم بیٹر رویندرا جدیجا کو اوپر بھیجنے کی وجہ سے پاکستان نے محمد نواز کا ایک اوور روک لیا اور پھر ان سے آخری اوور ہی کرایا گیا۔ مکی آرتھر کی رائے میں اگر بھارت جدیجا کے بجائے رائٹ ہینڈ بیٹر بھیج دیتا اور محمد نواز کا اسپیل جاری رہتا تو ممکن تھا وہ مزید وکٹیں لے کر بھارت کو مشکل میں ڈال دیتے تاہم ایسا نہ ہوا۔

متعلقہ خبریں

Back to top button

Adblock Detected

We Noticed You are using Ad blocker :( Please Support us By Disabling Ad blocker for this Domain. We don't show any popups or poor Ads.