کھیل

حارث کے حق میں رضوان کیا بولے؟ بھارتی کیوں سیخ پا ہوئے؟

یہ بات غیر متعلقہ ہے کہ حارث رؤف کی بے عزتی کرنے والا پاکستان کا تھا یا بھارت سے، اہم بات یہ ہے کہ اس فرد میں اقدار اور آداب کی کمی تھی

لاہور(سپورٹس ڈیسک)پاکستانی کرکٹر حارث رؤف کی مداح کے ساتھ جھڑپ کی ویڈیو وائرل ہوتے ہیجہاں نئے نئے کے تبصروں کا طوفان آ گیا‘وہیں ان کے ساتھی کھلاڑیوں اور خود پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) کی جانب سے کرکٹر کی حمایت میں بیانات کا سلسلہ بھی جاری ہو گیا۔حارث سے اظہارِ یکجہتی کے لیے ایکس پر بیان دینے والوں میں پاکستانی بیٹسمین محمد رضوان بھی شامل ہیں۔تاہم محمد رضوان کی پوسٹ بھارتی شہریوں کو ایک آنکھ نہ بھائی اور وہ سیخ پا ہوگئے۔محمد رضوان نے ایکس پر ایک پوسٹ میں کہا تھاکہ یہ بات غیر متعلقہ ہے کہ حارث رؤف کی بے عزتی کرنے والا پاکستان کا تھا یا بھارت سے، اہم بات یہ ہے کہ اس فرد میں اقدار اور آداب کی کمی تھی۔

انہوں نے مزید کہا کہ کسی کو بھی یہ حق نہیں ہے کہ وہ کسی انسان کی بے عزتی کرے، خاص طور پر اس کے گھر والوں کے سامنے۔محمد رضوان کا کہنا تھا کہ ایسے گھناؤنے رویے کو روکنا چاہیے۔ رواداری، احترام، اور ہمدردی جیسی اقدار تیزی سے ناپید ہوتی جا رہی ہیں۔بظاہر تو یہ پوسٹ حارث رؤف کے ساتھ اظہارِ یکجہتی کے لیے تھی لیکن اس میں بھارت کا ذکر انڈین شہریوں کو پسند نہیں آیا اور انہوں نے جوابی تبصروں کے ڈھیر لگا دیئے۔ایک بھارتی شہری ڈاکٹر خوشبو نے لکھا کہ ‘واضح ہے کہ پاکستانی کرکٹ شائقین آپ کی ٹیم کی قابل رحم کارکردگی سے ناخوش ہیں لیکن ہر چیز کا برا ہونے کا الزام بھارت پر لگانا! آپ لوگوں کو روکنے کی ضرورت ہے’

انہوں نے کہا کہ ‘جب یہی پرستار آپ کے آٹوگراف کے لیے 25 ڈالر ادا کرتے ہیں تو آپ اسے پسند کرتے ہیں لیکن جب وہ آپ پر تنقید کرتے ہیں تو وہ برے ہیں ‘؟مفضل وہرا نامی صارف نے کہا کہ ‘جب مداح خود دعویٰ کررہا ہے کہ وہ پاکستان سے ہے تو بھارت کا نام لینا سراسر غیر ضروری تھا’۔پری نامی خاتون صارف نے کہا کہ ‘شکست کو باوقار طریقے سے قبول کرنا سیکھیے پھر بھارت کے خلاف بیانیہ بنانے کی کوشش کریں ‘۔رائے نامی صارف نے لکھا کہ رضوان کو معلوم تھا کہ وہ پاکستانی ہے اس کے باوجود انڈیا کا نام لیا۔ایکس صارف نے کہا کہ ‘کچھ شرم کریں، یہ واضح ہے کہ وہ پاکستان سے ہے’، ساتھ ہی رضوان کا جملہ کوٹ کر کے انہوں نے ایک بار پھر شرم دلائی۔

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button