ٹیکنا لوجی

سام سنگ کا اپنے اسمارٹ فون صارفین کے لیے ‘بڑا تحفہ’

چینی اسمارٹ فون کمپنیوں نے ریم کی گنجائش بڑھانے والی ٹیکنالوجی کو مختلف اسمارٹ فونز کے لیے پیش کیا ہے۔

ورچوئل ریم ایک ایسی تیکنیک ہے جس میں سسٹم ان ایبل کرکے اسٹوریج میموری کو volatile میموری میں تبدیل کیا جاتا ہے۔اب تک سام سنگ فونز میں ایسی ٹیکنالوجی موجود نہیں مگر اب جنوبی کورین کمپنی نے اپنے اسمارٹ فونز کے لیے یہ اپ ڈیٹ متعارف کرانا شروع کردی ہے۔اسمارٹ فونز میں کمپیوٹر کی طرح تو فزیکل ریم کا اضافہ نہیں ہوسکتا اور اسی کی کمی پوری کرنے کے لیے ورچوئل ریم ٹیکنالوجی سامنے آئی ہے۔اس مقصد کے لیے سافٹ ویئر کی مدد سے ریم میموری کو volatile سسٹم اسٹوریج کے ذریعے بڑھا دیا جاتا ہے۔یہ سافٹ ویئر اسٹریم لائن پراسیسز کو استعمال کرکے ایپس کو اسٹارٹ کرتے ہوئے اسٹارٹ اپ ٹائم گھٹا دیتا ہے اور اس سے فون کیپراسیس کرنے کی طاقت بہتر ہوتی ہے۔شیاؤمی، رئیل می، اوپو اور ویوو کی جانب سے پہلے ہی مختلف فونز میں ورچوئل ریم کے آپشن کا اضافہ کیا ہے اور اینڈرائیڈ سسٹم میں ڈویلپر لیول پر ایسا کیا جاتا ہے۔

سام سنگ کی جانب سے بھی گلیکسی ڈیوائسز کے لیے ریم پلس کے نام سے ورچوئل ریم کو تیار کیا گیا ہے۔ایک اپ ڈیٹ کے ذریعے بھارت میں گلیکسی اے 52 ایس فونز میں ورچوئل ریم کا اضافہ کیا گیا ہے اور اس کی بدولت 6 جی بی ریم میں مزید 4 جی بی ریم کا اضافہ ہوسکتا ہے۔فی الحال کمپنی کی جانب سے اس حوالے سے کوئی باضابطہ اعلان نہیں کیا گیا اور نہ یہ واضح ہے کہ دیگر گلیکسی فونز میں اس فیچر کا اضافہ کب تک ہوسکتا ہے۔

متعلقہ خبریں

Back to top button

Adblock Detected

We Noticed You are using Ad blocker :( Please Support us By Disabling Ad blocker for this Domain. We don't show any popups or poor Ads.